ZAFFER BHAT CONTINUES MASS CONTACT PROGRAMME,WELCOMES UN SECRETARY GENERAL'S STATEMENT

Srinager 02 Oct/     The Jammu and Kashmir Salvation Movement (JKSM) Chairman Zaffer Akber Bhat on Tuesday under Mass contact programme Addresses Condolence and corner Meetings in outskirts of srinager city,Zaffer while welcomes  UN Secretary General Antonio's recent statement said your concern for deteriorating situation in Kashmir is welcome statement and United nations must play it's role in resolving lingering  Kashmir dispute. 
 
While commenting on Dialogue process he said tripartie  Dialogue is the only way forward to resolve lingering Kashmir dispute.  Zaffer condoles sad  demise of prominent political and social Activist Haji  Ghulam Ahmed Rather who happens to be the  father of  political  Activist Farooq Javed Rather,
 
 He  Paid Rich and glowing  tributes to late Gh Ahmed Rather  for his unparalleled ,unmatched  social  work dedication  and contribution's Towards  pro-freedom  movement , He said his contribution's  tremendous work and steadfastness  towards welfare and betterment of society will be remembered for long, while  expressing  solidarity and sympathy  with bereaved family especially with his son Farooq javeed Zaffer  prayed for departed soul and led his funeral  in shalimaar  ( doodh mohalla) srinagar.
 
He Also expresses complete solidarity with protesters   of district kulgam said there demand's are genuine and must be resolved. Zaffer  paid Glowing tribute's to Mohammad Aslam Baba for his unparalleled sacrifices  towards pious and noble  cause
 
 he said Nation salutes his steadfastness and  will be remember for long  .
 
He said we are duty bound to safeguard the sacrifices of our martyrs who laid down their lives for the betterment of our future,
 
said it's our moral and collective responsibility to show steadfastness and complete dedication with pro-freedom movement.
 
ظفر اکبر کی عوامی رابطہ مہم جاری،
 
اقوام متحدہ مئسلہ کشمیر حل کرنے میں اپنا رول ادا کریں،
 
سماجی کارکن غلام احمد راتھر کی وفات پر گہرے رنج و غم کا اظہار اور تعزیت پرسی،
 
سرینگر 02 اکتوبر/                   سینئر مزاحمتی قائد،جموں و کشمیر سالویشن مومنٹ چیرمین ظفر اکبر بٹ نے عوامی رابطہ مہم کو جاری رکھتے ہوئے سرینگر کے مضافاتی علاقوںمیں متعدد مقامات پر تعزیتی مٹینگوں و مجلسوں سے خطاب کیا،اپنی خطاب میں ظفر بٹ نے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے حالیہ بیان کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا آپ کا بیانحقیقت پر مبنی، کشمیری عوام کے احساسات و جذبات اور امنگوں کی عکاسی کرتا ہے،ظفر نے اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کو مخاطب کرتے ہوئے کہا مئسلہ کشمیر کو افہام وتفہیم ،پرامن طور طریقہ، مذاکراتی عمل کے ذریعہ حل کرانا آپ کی اہم ترین ذمہ داری ہے،ظفر نے نئی دہلی کی سیاسی قیادت کو مئسلہ کشمیر کے حل کے خاطر مذاکراتی عمل شروعکرنا کا مشورہ دیتے ہوئے کہا طاقت و تشدد، فوجی قوت، دھونس و دباو
 
¿ کی پالیسی مسائل کا حل نہیں ہے بلکہ مئسلہ کشمیر کے تینوں فریقین کو افہام و تفہیم سے جامع مذاکرات کے ذریعہ اس کا حل تلاش کرنا ہو گا،
ظفر نے مشہور و معروف سماجی و سیاسی کارکن غلام احمد راتھر جوکہ سیاسی کارکن فاروق جاوید راتھر کے والد محترم تھے کی وفات پر گہرے رنج و غم اور دوکھ کا اظہار کیاہے،ظفر نے شالیمار سرینگر میں مرحوم کی سماجی و سیاسی خدمات اور ان کی بے پناہ قربانیوں کو شاندار خراج عقیدت و خراج تحسین پیش کرتے ہوئے انہوں نے کہا مرحومسماجی سرگرمیوں کے لئے ہمیشہ متحرک و سرگرم تھے اور رواں تحریک مزاحمت کے دوران انہوں نے جو قربانیاںپیش کی وہ قابل ستائش ہیں ،
 
انہوں نے مرحوم کی زندگی پر مفصل روشنی ڈالتے ہوئے ان کو ملنسار،انسان دوست قرار دیا،ظفر نے غمزدہ اہل خانہ سے دلی تعزیت و تسلیت کا اظہار کیا اور مرحوم کی جنت نوشیکے لئے خصوصی دعائیں کی،انہوں نے کلگام کے لوگوں کی طرف سے مجوزہ فورسز کمپ کے خلاف احتجاج کو حق بجانب قرار دیا ہے کیونکہ وہاں کے لوگوں اس پر کے تحفظاتہیں، انہوں نے مطالبہ کیا ہے کہ انتظامیہ کو جلد از جلد ان کے مسائل حل کرنے چاہیے۔انہوں نے محمد اسلم بابا کو انکی قربانیوں ، ہمہ جہت شخصی پر شاندار خراج عقیدت و خراجتحسین پیش کرتے ہوئے کہا ان کی ہمہ جہت زندگی کا پہلو روشن دلیل کی مانند ہیں،
 
انہوں نے کہا جس ہمت و پامردی سے انہوں نے باطل قوتوں کے مکروہ عزائم کا ڈٹ کر مقابلہ کیا وہ واقعی قابل تعریف ہیں۔
 
انہوں نے کہا شہیدوں کی مقدس و عظیم قربانیوں کا تقاضا ہے کہ ہم استقامت و ثابت قدمی سے رواں تحریک مزاحمت کو اسکے منطقی انجام تک پہنچائیں۔