Continue ongoing freedom movement

 Kashmiri will never surrender before Indian Military might said incarcerated chairman salvation movement Zaffar Akber Bhat  while reacting to the statement given by present Indian Army Chief. He said people will continue on going freedom movement to its logical end peacefully and politically and Indian forces cannot suppress it through its military might.

ZAFFAR AKBER REACTS ON BAPIN RAWAT'S REMARKS, 
KASHMIR DISPUTE IS A LIVING REALITY, 
IT'S KASHMIR DISPUTE NOT SYRIA,

Srinagar 10 May / While strongly Reacting to the army chief General Bipin Rawat’s remarks that Kashmiri youth should realise that ‘Azadi’isn’t possible,Senior Hurriyat leader and incarcerated Jammu and kashmir salvation movement (JKSM ) chairman Zaffar Akber Bhat said " Rawat's threat that to bomb Kashmiris like Syrian regime is not new, But "it's not Syria it's kashmir dispute which is internationally recognised disputed territory of which 19 resolutions are signed by both indo -pak leadership at United Nations, He said 
Threat to one crore and more than 25 lakhs of people just they want their right to self determination which is promised by then leadership of India is highly deplorable and against humanity ,
Bhat said his statement is against to the reality, bundle of lies and Against to the stark realities, said " Kashmir conflict is a living reality, political and humanitarian problem and it should be addressed politically and with compassion.
Military might, military solution will only make more bloodshed ,under well planned conspiracy India is using military might to suppress people of Kashmir and pro freedom struggle, But India can't suppress Kashmiris with military might or choking political space and implementing political vendetta, 
while condemn Bapin Rawat's statement Bhat said " his statement is provocative and advised him to read reality , historical perspective and disputed nature of Jammu and Kashmir then talk about Kashmir issue, 
Bhat said will continue freedom movement till the goal of right to self-determination is Achieved, 
Meanwhile Zaffar Akbar Bhat has strongly condemned the pellet firing on innocent unarmed civilians at Sumbal Bandipoora,in which a civilian Abdul Rashid wounded badly and is known admitted At Srinagar hospital.

Spokesman also condemned the continuous detention of Chairman Zaffar Akber Bhat and senior party leader Hilal Ahmad Beigh. Spokesman Demands immediate release of Zaffar Akber and Hilal Ahmad Beigh.

 

جنرل بپےن راوت کے ریمارکس پر ظفر اکبر کا شدید ردعمل، 
مسئلہ کشمیر زندہ جاوید حقیقت، دستبرداری کا کوئی امکان باقی نہیں، 
رواں جدوجہد کو اسکے منطقی انجام تک پہنچانے کا عزم دہرایا، 
سرینگر 10 مئی : سینئر مزاحمتی قائد، جموں و کشمیر سالویشن مومنٹ کے محبوس چئیرمین ظفر اکبر بٹ نے ہندوستان آرمی چیف جنرل بیپن راوت کے ریمارکس پر شدید ردعمل کا اظہار کیا اور کہا کشمیری عوام کی جدوجہد حق و صداقت پر مبنی اس سے دستبرداری کا کوئی جواز و امکان باقی نہیں، اخبارات کے لئے جاری بیان کے مطابق سالویشن مومنٹ چئیرمین ظفر اکبر بٹ نے ہندوستان کے آرمی چیف جنرل بیپن راوت کے ریمارکس پر شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے ،
بٹ صاحب نے آرمی چیف کے ریمارکس کو حقیقت سے کوسوں دور قرار دیا ہے، انہوں نے کہا آپ شامی حکومت کی طرز پر یہاں کارروائی کرنے کی دھمکی دے رہے ہیں مگر آپ کو اس بات کا اندازہ و ادراک ہونا چاہیے کہ مسئلہ کشمیر بین الاقوامی سطح پر تسلیم شدہ متنازعہ مسئلہ ہے، انہوں نے کہا اقوام متحدہ میں 19 کے قریب قراردادوں پر ہندوستان اور پاکستان کی لیڈرشپ کے دستخط اس بات کی گواہی دے رہے ہے، انہوں نے کہا ہندوستان کی سیاسی قیادت نے جموں و کشمیر کی عوام سے حق خود ارادیت کا وعدہ کیا ہوا ہے، 
بٹ صاحب نے کہا آپ باضمیر قوم کو بندوق و گولیوں سے ڈرا رہے ہیں تاکہ وہ اپنے بنیادی و پیدائشی حق حق خود ارادیت کے حصول سے دستبردار ہو جائیں جو کہ انسانی، اخلاقی و جمہوری قدروں کے منافی ہے ،
انہوں نے جنرل بپےن راوت کو تاریخ کا مطالعہ کرنے کا مشورہ دیتے ہوئے کہا آپ کو اس مسئلہ کی تاریخی حقیقت، حقائق اور اس کی متنازعہ حیثیت سے باخبر ہونا چاہیے، 
انہوں نے کہا ہندوستان مسئلہ کشمیر کو تشدد اور طاقت و قوت کے بل پر حل کرنا چاہتا ہے اور ایک منصوبہ بند طریقہ سے یہاں کے نوجوانوں کو پرامن سیاسی سرگرمیوں سے جبری روکا جارہا ہے تاکہ کشمیری نوجوان رواں تحریک مزاحمت سے دستبردار ہو جائیں مگر ہم ان کو یہ کہنا چاہتے ہیں کہ ہم باطل قوتوں اور ظلم و استبداد کے سامنے جھکنے کو تیار نہیں ہیں، 
انہوں نے کہا 1947 سے کشمیری عوام اپنے پیدائشی حق حق خود ارادیت کے لئے قربانیاں پیش کر رہے ہیں، مگر موجودہ دور میں جس طرح ہمارے نونہالوں، جگر گوشوں اور جذبہ حریت سے سرشار سرفرشوں کو بے رحمی و تشدد سے ہلاک کیا جارہا وہ انتہائی دردناک و تکلیف دہ ہے، 
انہوں نے نئی دہلی کو مشورہ دیتے ہوئے کہا کشمیر مسئلہ ایک سیاسی و انسانی مسئلہ ہے جس کو انسانی و سیاسی تناظر سے ہی دیکھا جانا چاہئے اور مسئلہ کشمیر کو حل کرنے کے خاطر طاقت و تشدد کے بجائے بامعنی مذاکرات ہی واحد راستہ ہے، انہوں نے رواں جدوجہد کو اسکےمنطقی انجام تک پہنچانے کا عزم دہراتے ہوئے کہا شہیدوں کے مقدس خون کا تقاضا ہے کہ ہم استقامت و ثابت قدمی سے رواں جدوجہد کو اسکے منطقی انجام تک پہنچائے، 
ظفر اکبر بٹ نے سمبل میں فورسز کی اندھا دھند پیلٹ فائرنگ کے نتیجے میں متعدد عام شہریوں خصوصاً عبدالرشید نامی عام شہری کو بری طرح زخمی کرنے کی کارروائی پر شدید الفاظ میں مذمت کی ہے، انہوں نے زخمیوں کی جلد صحت یابی کے لئے خصوصی دعا کی ہے۔
دریں اثناء سالویشن مومنٹ کے ترجمان نے چیرمین ظفر اکبر بٹ اور سینئر لیڈر ہلال احمد بیگ کی مسلسل حراست کی زبردست الفاظ میں مذمت کی ہے۔
ترجمان نے ظفر اکبر اور ہلال بیگ سمیت تمام نوجوانوں کی فوری رہائی کی اپیل کی ہے