ہ مقبوضہ کشمیر کی آزادی کے لئے حکومت آزاد کشمیر کو اپنا کردار مو ثر انداز میں ادا کرنا ہو گا

 مظفرآباد (( ))تحریک کشمیر برطانیہ کے سربراہ فہیم کیانی نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر کی آزادی کے لئے حکومت آزاد کشمیر کو اپنا کردار مو ثر انداز میں ادا کرنا ہو گا۔ بیرون ممالک آباد کشمیریوں اور پاکستانیوں کے ساتھ روابط بڑھا کر ان کو عالمی سطح پر مسلہ کشمیر اجاگر کرنے کے لئے ان کی خدمات سے استفادہ کر نا ہو گا۔ 
راجہ فہیم کیانی نے کہا کہ عالمی سطح پر کشمیریوں کو ایک ہو نا ہو گا اور مشترکہ لائحہ عمل اختیار کر کے آ گے بڑھنا ہو گا تاکہ بھارت پر مزید عالمی سطح پر دباو بڑھایا جائے۔ اس وقت ہماری توجہ اس بات پر ہو نی چاہے کہ بھارت مسلہ کشمیر کو متنازعہ تسلیم کرئے۔ آزاد کشمیر اور پاکستان میں تحریک آزادی کشمیر کی جدوجہد کو تحریری شکل میں لا کر آنے والی نسلوں کے لئے محفوظ کیا جائے۔ 
انہوں نے کہا کہ بر طانیہ سے لیکر پر تگال تک تحریک آزادی کشمیر کے لئے تحریک کشمیر کی صورت میں مخلص اور بے لوث کارکنان موجود ہیں۔ 
فہیم کیانی نے کہا کہ ہر تحریک میں مشکل مراحل آتے ہیں لیکن نظریاتی وابستگی کسی کو اپنے مشن اور مقصد سے دور نہیں کرتی ہے۔ 
تقریب سے خطاب کرتے ہو ئے نائب امیر جماعت اسلامی شیخ عقیل الرحمن نے کہا کہ تحریک کشمیر بر طانیہ کا کام قابل تعریف ہے ۔ عالمی سطح پر جو کاوشیں فہیم کیانی کر رہے ہیں اس کو ہم خراج تحسین پیش کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومت پاکستان اور آزاد کشمیر کو اب اپنے تمام وسائل استعمال کر کے مقبوضہ کشمیر کے لوگوں کو بھارتی ظلم سے آزاد کرنا ہو گا۔ 
تقریب سے سینئر حریت رہنما اور جموں و کشمیر سالویشن مومنٹ کے چیرمین الطاف احمد بٹ نے کہا کہ راجہ فہیم کیانی مسلہ کشمیر کے حوالے سے بر طانیہ اور یورپ میں اب ایک استعارہ بن چکے ہیں۔ دیار غیر میں جو کام تحریک کشمیر بر طانیہ کر رہی ہے اس کو مزید آگے بڑھانا ہو گا۔۔ مسلہ کشمیر بر طانیہ کا پیدا کردہ تھا اور اس کے حل کے لئے بر طانوی با اثر حلقوں تک رسائی ضروری ہے اور اس کام کا بیڑا فہیم کیانی نے اٹھایا ہے اور ہم ان کو ان کی کاوشوں پر خراج عقیدت پیش کرتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ 2008 کے بعد تحریک آزادی کشمیر نوئے کی دہائی میں داخل ہو چکی ہے جس کے لئے ہم نے بیس کیمپ میں مسلہ کشمیر کے حوالے سے اپنے کردار کو دبارہ متحرک کرنا ہو گا۔ 
قاضی شاہد حمید نے کہا بیس کیپمپ کی حکومت کو مقبوضہ کشمیر کی موجودہ صورت حال کے پیش نظر اپنے کردار کا ا سر نو جائزہ لینا ہو گا۔ 
دیگر مقررین کا کہنا تھا کہ وہ مقبوضہ کشمیر کے عوام کے حق خود ارادیت کی جدو جہد کا ساتھ دیتے رہیں گے۔۔ن
 Muzaffarabad ,Feb 27:President Tehreek-e-Kashmir UK Raja Fahim Kayani has said that, The government of Azad Kashmir must play its role effectively for the liberation of occupied Kashmir. Increasing ties with Kashmiris and Pakistanis living abroad will benefit from their services to highlight Kashmir on a global scale.He was addressing Round Table Conference at Muzaffarabad, organized by Jammu Kashmir Liberation Cell.
During his address, Kayani asserted that, Kashmiris will have to be united globally and will have to come up with a joint strategy to increase the pressure on India more globally."
At this point, our focus should be on India to recognize Kashmir as a disputed issue. We must Protect freedom struggle in Azad Kashmir and Pakistan for generations to come in writing. He added.Explaining the efforts and hard work of Tehreek e Kashmir UK, and Kashmiri and Pakistani diaspora abroad Kayani said that, There are sincere and unscrupulous workers for the Kashmir Freedom Movement in the form of Tehreek-e-Kashmir from Britain to Portugal.Every movement has its difficult stages, but ideological commitment does not distract anyone from its mission and purpose.
Addressing the ceremony, Naib Amir Jamaat-e-Islami Sheikh Aqeel-ur-Rehman said that the work of Tehreek-e-Kashmir was praiseworthy. 
We pay tribute to the efforts Fahim Kayani has made globally. He said that the government of Pakistan and Azad Kashmir should now use all their resources to liberate the occupied Kashmir people from Indian oppression.
Addressing the conference Senior Kashmiri Hurriyat Leader & Chairman Jammu Kashmir Salvation Movement Altaf Ahmed Bhat said that, Raja Fahim Kayani has now become a metaphor for Kashmir cause in Britain and Europe. The work Tehreek e Kashmir UK is doing in Britain needs to be enhanced, it needs momentum and support from within Pakistan and Kashmir. 
Talking retrospectively, Bhat said thatThe Kashmir issue was created by the British and its solution requires access to British-dominated constituencies and Fahim Kayani has taken up the task and we pay tribute to his efforts.He said that since 2008, the freedom movement has entered into the nineties, for which we will have to reassert our role in the base camp concerning the issue of Kashmir.
 
Qazi Shahid Hameed said that the base camp government will have to re-evaluate its role in view of the current situation in occupied Kashmir.
Other speakers say they will continue to support the struggle of self-determination for the people of occupied Kashmir until Kashmir gets freedom from India.